چاچا چرسی 191

چاچا چرسی

یہ میری آج کی 22 ویں سگریٹ تھی ، اماں سے وعدہ کر کے نکلا تھا کے آج صرف ایک پیوؤنگا ، لیکن میری کمبختی اور کمزور نیت کے ظلم نے مجھے آج بھی اپنے وعدے کے سامنے شرمندہ کر دیا .
وزن اب صرف 40 کلو رہ گیا تھا میری ان بوسییدا حادویوں پر ، لیکن یہ سگریٹ پتہ نہیں کس سرور کا نام ہے ، جان سے بھی زیادہ عزیز ہے مجھے ، وسیع احمد کی بجائے “چاچا چرسی” کہتے ہیں محلے کے بچے ، ہالانکہ زندگی میں صرف ایک دفعہ چرس والی سگریٹ پینے کا شرف حاصل ہُوا ہے .
ان محلے کے بچوں کی زبان بھی کون روک سکتا ہے اور کون پرواہ کرتا ہے ان بڑے ناموں سے پکارے جانے کی ، جب ایک پوری سگریٹ میرے منه میں ہو اور اس کے تمباکو کا رسیلا رس میرے جسم میں گھول رہا ہو . لوگوں کے لیے سگریٹ ایک کالا دھواں اور زہر ہی ہے
لیکن کوئی مجھ سے پوچھے تو میں اسے بتاؤں کے اِس تمباکو کی محبت اور اِس دھواں کی گرمی سے مجھے کتنا عشق ہے ،
اِس تمباکو کا ملاییم دھواں جب زبان سے ٹکراتی ہے تو میں ہواؤں سے باتیں کرنے لگتا ہوں ، ہونٹوں پر فلٹر لگتے ہی روح مسرور ہو کر جو وجد کرتی ہے شاید اِس عشق تمباکو سے ان کا دِل مکمل ویران ہے .
میں کیسے چور دوں میرے اِس 16 سالا دوست کو ، جس نے مجھے غمی خوشی ، بارش دھوپ ، صحرا دریا ، صبحا شام ، محرم عید ہر وقت میرے ساتھ دیا . کس یار کا ہے ایسا یارانہ ذرا ہمیں بھی تو باتلا دوں ؟ میری تنہائی دوڑ کرنے ، سوا اِس کے عطا ہی کون ہے میرے پاس ؟ لوگوں کو بو آتی ہے میرے منہ سے ، حیا نہیں آتی ان کو اِس پاکیزہ خوشبو کو بو کہتے ہوئے ؟
نا شادی ہوئی نا بچے ، لوگ کہتے ہیں چرسی ہے لڑکی مت دینا ، نا دوں بھائی ، بارے لوگوں کی ازدواجی زندگیاں ڈھنگ سے چلی ہی کب ہیں ، جو ہَم کسی کو بیاں کر اسکی زندگی بھی اِس دھواں میں جھونک دیں ؟
36 سال کامیابی سے گزارے ہیں لیکن 56 سالا بوڑھے بھی مجھے بابا کہتے ہیں . کیا ایسی زیادتیاں کرنے والے انسانون کے لیے سگریٹ چور دوں ؟
16 سال پہلے ابّا کا انتقال والے دن بہت رویا تھا ، بے ہوش ہُوا تھا ، پِھر اٹھا تھا ، پِھر رویا تھا ، اٹھتا تھا ، گرتا تھا ، روتا تھا ، لوگ دیوانہ کہنے لگے ، پاگل سمجھ بیٹھے . .
ابّا کو دوڑ لائے گئے ، بہت دوڑ لائے گئے ، ابّا چلے گئے میرے ، مرتے وقت ماتھاچوم کر کان میں کہا تھا ، پہلے تو آئیگا میرے پاس میرے لال ، “اسیی دن سے تو ابّا کے پاس جانے کی کوشش کر رہا ہون”

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کیا کہتے ہیں؟

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.