انجائنا کیا ہے اسکی وجوہات اور احتیاطی تدابیر 437

انجائنا کیا ہے اسکی وجوہات اور احتیاطی تدابیر

اس سے پہلے والی پوسٹ‌میں ہم نے انجائنا اور دل کے دورے کو ڈسکس کیا تھا، آج کی اس پوسٹ کا مطلب انجائنا کیا ہے اسکی وجوہات اور احتیاطی تدابیر کو تفصیل سے ڈسکس کرنا ہے تاکہ کوئی ابہام نہ رہ جائے.

تجی شریانوں کورنوری ارٹیرییس کا مرض رفتہ رفتہ بڑھتا ہے رگیں تنگ اور سخت ہو جاتی ہیں یہ تنگی رکاوٹ نامکمل ہوتی ہے . جس كے نتیجے میں دِل كے عضلات کو مناسب مقدار میں خون نہیں ملتا خصوصاً جب دِل کو اضافی کام کرنا پڑتا ہے جیسے چلنے یا سیڑھی چڑھنے كے دوران .

عموماً 30 سے 35 برس كے بعد %2 افراد کو انجائنا ہوتا ہے . اور یہ عورتوں كے مقابلے میں مردوں میں زیادہ جلدی ظاہر ہوتا ہے .

انجائنا کی وجوہات

یہ بات ذہن میں رہے کے انجائنا اس وقت سامنے آتا ہے جب جسم یا ذہن میں بوجھ پڑے اِس صورت میں جسم کو زیادہ توانائی درکار ہوتی ہے . لہذا دِل کو زیادہ تیز اور قوت سے کام کرنا پڑتا ہے کام كے لیے توانائی ضروری ہے اگر دِل کی تجی شاریانیں ( کورنوری ارٹیرییس ) صحت مند ہوں تو وہ دِل كے کام کو آسان بناتی ہیں .
( اگر اِس سے لاپرواہی ہوتی جائے تو حملہ قلب بھی ہو سکتا ہے . )
انجائنا کا اظہار صرف محنت اور شدت جذبات كے وقت ہوتا ہے کیوں کے کورنوری رگوں میں خون کو رسانی اور محنت كے درمیان جو توازن ہے تو بگڑ جاتا ہے . آرام کرنے اور یا نیٹرو گلیسرین کی گولیاں زبان كے نیچے رکھنے سے درد رفہ ہو جاتا ہے .
جب دِل کو اضافی خون درکار ہو اور کسی خرابی کی وجہ كے باعث اسے نا ملے جس کی وجہ یہ ہے کے جیسے جیسے عمر بڑھتی ہے رگوں کی سختی اور تنگی كے ساتھ ساتھ دوران خون کےنئے راستے شاخسانو ( برانچیس ) کی شکل میں بنتے جاتے ہیں اورخون کی روانی کی رکاوٹ كے باوجود متبادل خون رسانی کا نظام بن جاتا ہے اور صرف محنت اور جذبات كے وقت اِس کی کمی کا احساس انجائنا کی صورت میں ظاہر ہوتا ہے . ہارٹ اٹیک كے درد كے برعکس انجائنا کا درد بار بار ہو کر ختم ہو جاتا ہے . اکثر افراد کو سالہاسال تک انجائنا ہوتی رہتی ہے مگر ہارٹ اٹیک نہیں ہوتا . بعض مرتبہ انجائنا سے آپ سے آپ شفا ہو جاتی ہے اور انجائنا ذائل ہو جاتی ہے جس کی وجہ متبادل خون رسانی ( آلٹرنیوٹو سرکولیشن ) ہے . اسے قدرتی بائے پاس بھی کہتے ہیں .

انجائنا كے ¼ مریضوں کو ہارٹ اٹیک ہوتا ہے جن لوگوں کو ہارٹ اٹیک سے پہلے انجائنا ہوتا تھا . ہارٹ اٹیک كے بعد ان کی انجائنا دورست ہو جاتی ہے . جس کی وجہ یہ ہے کے جو رگ تنگ ہو گیٹ ہی اور جو مسلسل باعث درد تھی اب وہ بند ہو گئی اور دِل کا وہ حصہ جہاں پرخون کی کمی تھی اب وہ مردہ ہو گیا لہذاخون كے دوران کی ضرورت نئی رہی .

انجائنا کے اسباب ، علاج اور علامات

اِس کا اک خاص طرز اور انداز ہوتا ہے اِس كے وقوع پذیر ہونے كے لیے مخصوص ماحول اور حالت مثلاً محنت ، جذبات ، وغیرہ ضروری ہیں مثلاً کھانے كے بعد ، بس پکڑنے كے لیے تیزی دکھائی ، معمول كے مطابق لفٹ كے بجائے زینہ پر چہرے ، کسی چیز کو دھکا لگاتے ہوئے یا سرکاتے ہوئے اسی طرح معمول سے زیادہ غصہ کیا یا مصروفیات بڑھا لی .

ان انجائنا میں مستقل مزاجی ہوتی ہے اور پیش گوئی کی جا سکتی ہے کے کب درد ہو گا اور درد نیٹرو گلیسرینی کی گولیاں زبان كے نیچے چوسنے پر رفہ ہو جاتا ہے .
غیر مستحکم انجائنا ( ان اسٹیبل انجائنا )

طرز اور انداز :
اِس انجائنا کا درد پہلے كے مقابلے میں بار بار ہونے لگے یا شدت بڑھ جائے تو جس بات سے پہلے درد نئی ہوتا تھا اب ہوتا ہے یا پہلے جس کام سے ہلکا درد ہوتا تھا اب زیادہ شدید ہوتا ہے اور زیادہ دیر تک رہتا ہے جو درد پہلے 2 منٹ تک رہتا تھا اب وہ بڑھ کر 8 ، 10 منٹ یا 15 ، 20 منٹ تک رہتا ہے .
غیر مستحکم انجائنا کی کیفیت انجائنا اور ہارٹ اٹیک كے بن ہوتی ہے اِس کا درد اور تکلیف انجائنا سے زیادہ شدید ہوتی ہے اور زیادہ دیر تک رہتی ہے اور بظاہر ایسا معلوم ہوتا ہے کے ہارٹ اٹیک ہو گیا ہے لیکن کبھی دورست بھی رہتی ہے مگر عموماً تبدیلیاں خفیف اور عارضی ہوتی ہے اورخون میں قلبی انزیمی ( کاردیاک انزیمی ) کا بھی اضافہ نہیں ہوتا .

روز مرہ سے زیادہ محنت اور مشقت
شدید غصہ یا حیجان
پیٹ بھر کر مرجان اور مٹھی غذائیں كھانا
جذبات کا تلاطم
ماحول کی کشیدگی
بے انتہا غمی یاخوشی غرض کوئی بھی بات توازن متغیر کر سکتی ہے .

علامات :

بیچینی اور اضطراب

نبض کی رفتار تیز ہو سکتی ہے
درد كے ساتھ پسینہ آنا
جی کا متلانا
آنکھوں كے سامنے اندھیرا چھاجانا
سانس کا پھولنا

علاج :
جس درد میں نیٹرو گلیسرین کی گولیاں چوسنے سے آرام آجاتا تھا اب ان گولیوں میں اتنی تاثیر نہیں رہتی ہے یعنی اب انجائنا کا شمار اور کردار بَدَل جاتا ہے . اِس کی بڑی شدت اور وقفہ میں اضافہ ہو جاتا ہے . اب اِس انجائنا میں توازن اور استحکام نہیں رہا اسکی وضع بَدَل گئی ہے اسی ہی وجہ سے اسے غیر مستحکم انجائنا کہا جاتا ہے اور اِس بات کا قووی اندیشہ ہے کے یہ بڑھ کر ہارٹ اٹیک نا بن جائے .

غیر مستحکم انجائنا کی مختلف حالتیں

1 . انجائنا کا مریض کوئی غیر معمولی کام کرے جس سے درد ہونے لگے اور وہ کام بند نا کرے نا نیٹرو گلیسرین کی گولیاں چوز بلکہ کام کو جلدی ختم کرنے کی کوشش میں مزید عجلت کرے تو اِس بات کا امکان ہے کے ان کا مستحکم انجائنا غیر مستحکم انجائنا میں تبدیل ہو جائے . اور پِھر نا آرام سے اور نا نیٹرو گلیسرین سے تسکیں ملے .
2 . اک صحت مند آدمی اچانک کام کرتے کرتے یا غیر معمولی زور لگاتے ہوئے درد کی گرفت میں آجائے اور جس کو وہ غلطی سے بعد ہضمی سمجھ لے یہ بھی انجائنا سے بڑھ کر ہارٹ اٹیک ہو سکتا ہے .
3 . اک جانا پہچانا دِل کا مریض جو بظاہر ٹھیک تھا اس کو پہلے کی طرح دوبارہ درد ہو گیا جو پہلے تو نیٹرو گلیسرین کی گولیاں سے رفہ ہو جاتا تھا لیکن اِس مرتبہ نہیں ہوا اور نا ہی آرام سے فرق پڑا مطلب کے یہ شخص غیر مستحکم انجائنا كے مرحلہ میں داخل ہو گیا ہے اور ہارٹ اٹیک کا سخت اندیشہ ہے .
4 . اک شخص کی انجائنا قابل برداشت اور مستحکم ہوتی ہے اب یہ شخص کسی غیر معمولی حالت میں آجائے بچوں کی شادی یا عزیز کی رحلت كے سلسلے میں کام کا دباؤ جذبات کا اُتار چڑھاؤ ، بھاگ دور ، کھانے پینے میں بعد احتیاتی یہ سب مل کر مستحکم انجائنا کو غیر مستحکم کر دیتے ہیں اور اب نیترو جلیسرینی کی گولیوں سے اور آرام کرنے سے بھی درد رفہ نہیں ہوتا .
5 . چند افراد کو انجائنا کی تکلیف اِس قدر جلدی جلدی ہوتی ہے کے اُنہیں روزانہ 50‬ مرتبہ تک درد اٹھ سکتا ہے اِس قدر تکلیف میں ہوتے ہیں کے چلنا پھرنا ، غسل کرنا یہاں تک کے كھانا وغیرہ بھی مشکل ہوتا ہے . جھک کر جوتا نہی پہن سکتے پورا كھانا نہیں کھا سکتے ان سب سے درد ہو سکتا ہے . یہاں تک کے بسا اوقات سیدھا چھت تک نہیں لیٹ سکتے ( لیٹنے سے دِل کا کام بڑھ جاتا ہے ) درد کی وجہ سے سوتے سے اٹھ کر بیٹھنا پڑتا ہے بعض مرتبہ درد بڑھ جانے کی وجہ بھی ظاہر ہوتی . یہ افراد لاتعداد نیٹرو گلیسرین کی گولیاں چوستے رہتے ہیں یہ بھی غیر مستحکم انجائنا ہے .
6 . انجائنا کی شکایت حالت سکون یا سوتے میں بھی ہو سکتی ہے اِس صورت میں ہارٹ اٹیک كے امکانات بڑھ جاتے ہیں .

انجائنا كے مریض اور متعلقین كے لیے رہنما ہدایت

غیر مستحکم انجائنا

اگر درد آدھے گھنٹے سے زیادہ رہے یا عام طور پر جس قدر ہوتا تھا اِس سے زیادہ رہے یا ماضی كے مقابلے میں کم محنت سے ہو جائے یا درد کی شدت یا بڑی بڑھ گئی یا درد کا وقفہ بڑھ گیا ہے یا درد زیادہ دیر تک رہا اور بظاہر اِس میں خرابی کی کوئی وجہ بھی نظر نہیں آئی اور درد كے ساتھ پسینہ آئے یا جی متلائے یا اختلاج قلب ہو یا آنکھوں كے سامنے اندھیرا چھا جائے یا زندگی میں پہلی دفعہ اِس طرح کی شکایت ہوئی تو اِس بات کا اندیشہ ہے کے یہ انجائنا سے بدتر شکل ، غیر مستحکم انجائنا کی ہے اور اگر اِس کا فوری سدباب نہیں کیا جائے گا تو اِس کا اختتام حملہ قلب پر ہو گا اور اِس کی اہمیت بھی اسی میں مضمر ہے کے اِس کی شناخت کر كے ہر ممکن کوشش اِس بات کی کی جائے کے درد اِس مرحلہ پر رک کر پلٹ جائے ورنہ ہارٹ اٹیک کا خطرہ ہو سکتا ہے . اِس کا علاج اسی طرح کیا جائے جیسے کے باقاعدہ حملہ قلب کا کیا جاتا ہے . قطع نظر اِس بات كے کے بیمار کو ہسپتال میں داخل کیا جائے یا گھر پر رکھا جائے فوری طور پر طبی مشورہ کی ضرورت ہے جس میں دِل کی پتی ( ای . سی . جی ) بھی ضروری ہے . اگر دِل کی پتی ( ای . سی . جی ) درست بھی ہو تو اِس کا علاج ای . سی . جی کی نگرانی ضروری ہے کیونکہ ہو سکتا ہے شروع شروع میں دِل کی پتی میں مرض کی پوری شدت ظاہر نا ہو .
ایسے آدمی کا علاج بستر پر آرام ، ( سکون آور ) اور دفعہ درد ادویات ، رگوں کو کشادہ کرنے والی ادویات بعض ڈاکٹرخون کو پتلہ کرنے والی ادویات بھی دیتے ہے . ڈاکٹرز میں اک مکتبہ فکر کا موقف یہ ہے کے غیر مستحکم انجائنا میں عارضی خرابی اِس لیے واقع ہو جاتی ہے کے کورنوری رگ سوکھارہنے کی وجہ سے تنگ ہو جاتی ہے یا چپک جاتی ہے جس کی وجہ سے دوران خون اچانک منقطع ہو جاتا ہے یا بے انتہا کم ہو جاتا ہے جو مناسب توجہ اور علاج سے پِھر بَحال ہو جاتا ہے .
جن لوگوں کو حملہ قلب ہوتا ہے وہ اگر اپنے ذہن پر زور ڈالیں تو ان کو یاد آئے گا کے حملہ قلب سے پہلے ان کو دِل کی تکلیف كے ہلکی ہلکی اثر تھے جن کی طرف انہوں نے توجہ نہیں دی اور پس منظر میں یہ غیر مستحکم انجائنا تھی جو حملہ قلب کی خبر یا اِس کا پیش خیمہ تھی جس کا مناسب سدباب کر لیا جاتا تو غالباً حملہ قلب نہیں ہوتا اور اِس حَل تک نہیں پہنچتی .

اپنے عزیز و اقارب کے ساتھ انجائنا کیا ہے اسکی وجوہات اور احتیاطی تدابیر کو شئیر کریں تاکہ ہر بندہ ان وجوہات کو جان سکے.

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کیا کہتے ہیں؟

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.